Friday, February 24, 2012

walden ka zikar quran pak main

As salamu allaiqum

walden ka zikar quran pak main mojod ha

Allah talah walden ka bare main quran pak main irshad farmate ha .

(2) اور ہم نے انسان کو اپنے والدین کے ساتھ نیکی کرنے کی تاکید کی کہ اسے اس کی ماں نے تکلیف سے اٹھائے رکھا اور اسے تکلیف سے جنا اوراس کا حمل اور دودھ کا چھڑانا تیس مہینے ہیں یہاں تک کہ جب وہ اپنی جوانی کو پہنچا اور چالیں سال کی عمر کو پہنچا تو اس نے کہا اے میرے رب مجھے توفیق دے کہ میں تیری نعمت کا شکر ادا کروں جو تو نے مجھ پر انعام کی اور میرے والدین پر اور میں نیک عمل کروں جسے تو پسند کرے اور میرے لیے میری اولاد میں اصلاح کر بے شک میں تیری طرف رجوع کرتا ہوں اور بے شک میں فرمانبردار میں ہوں
( سورة الأحقاف , Al-Ahqaf, Chapter #46, Verse #15)

(1) اور جب ہم نے بنی اسرائیل سے عہد لیا کہ الله کے سوا کسی کی عبادت نہ کرنا اور ماں باپ اور رشتہ داروں اور یتیموں اور محتاجوں سے اچھا سلوک کرنا اور لوگوں سے اچھی بات کہنا اور نماز قائم کرنا اور زکوةٰ دینا پھر سوائے چند آدمیوں کے تم میں سے سب منہ موڑ کر پھر گئے
( سورة البقرة , Al-Baqara, Chapter #2, Verse #83)

اور ہم نے انسان کو اس کے ماں باپ کے متعلق تاکید کی ہے اس کی ماں نے ضعف پر ضعف اٹھا کر اسے پیٹ میں رکھا اور دو برس میں اس کا دودھ چھڑانا ہے تو میری اور اپنے ماں باپ کی شکر گزاری کرے میری ہی طرف لوٹ کر آنا ہے
Surah luqman chaptor no 31 verse no 14

(2) آپ سے پوچھتے ہیں کیا خرچ کریں کہہ دو جو مال بھی تم خرچ کرو وہ ماں باپ اور رشتہ داروں اور یتیموں اور محتاجوں اور مسافروں کا حق ہے اور جو نیکی تم کرتے ہو سو بے شک الله خوب جانتا ہے
( سورة البقرة , Al-Baqara, Chapter #2, Verse #215)

(4) اور مائیں اپنے بچوں کو پورے دو برس دودھ پلائیں یہ اس کے لیے ہے جو دودھ کی مدت کو پورا کرنا چاہے اور باپ پر دودھ پلانے والیوں کا کھانا اور کپڑا دستور کے مطابق ہے کسی کو تکلیف نے دی جائے مگر اسی قدر کہ اس کی طاقت ہو نہ ماں کو اس کے بچہ کی وجہ سے تکلیف دی جائے اور نہ باپ ہی کو اس کی اولاد کی وجہ سے اور وارث پر بھی ویسا ہی نان نفقہ ہے پھر اگر دونوں اپنی رضا مندی اور مشورہ سے دودھ چھڑانا چاہیں تو ان پر کوئی گناہ نہیں ہے اور اگر کسی اور سے اپنی اولاد کو دودھ پلوانا چاہو تو اس میں بھی تم پر کوئی گناہ نہیں بشرطیکہ تم دے دو جو دستور کے مطابق تم نے دینا ٹھرایا ہے اور الله سے ڈرو اور جان لو کہ الله اسے جو تم کرتے ہو خوب دیکھتا ہے
( سورة البقرة , Al-Baqara, Chapter #2, Verse #233)

Dua main yaad rakheya ga

amel soname

amel_soname@yahoo.com

Allah talah ny insan ko rishto main banta

As salamu allaiqum
Tamam tareefe Allah he ka liya ha jis na insan ko peda kiya or insan ko ashraf ul makhlooqat banaya . phir yaha tak insan ko soch na ki samajh na ki salahiyat be ata ki . Allah he ki meharbani se Allah ny insan per rehem kiya or insan ko apious main reshtadaro main bant deya or unka haqooq banahe . nahi to zamanahe jaheliyat main bohat bora hall tha insan ka . insan ki kohi hasiyat nahi thi . log ake dosare ka he dushman tha or larahe hote thi . laraheya be ahse jo naslo naslo tak chalti thi .
Allah talah farmate ha ka apna rishtadaro ka saat acha salooq karo . yani unk sath bigaro nahi .
Quran pak main rab bari talah irshad farmate ha
(30) اوروہی ہے جس نے انسان کو پانی سے پیدا کیا پھر ا س کے لیے رشتہ نسب اور دامادی قائم کیا اور تیرا رب ہر چیز پر قادر ہے

( سورة الفرقان , Al-Furqan, Chapter #25, Verse #54)
Is aiyat main Allah talah farmate ha or wohi ha jis na insan ko pani se peda kiya phir is k liya rishta nasab or damadi kahim kiya or tera rab her cheez per qadir ha


(1) اور جب ہم نے بنی اسرائیل سے عہد لیا کہ الله کے سوا کسی کی عبادت نہ کرنا اور ماں باپ اور رشتہ داروں اور یتیموں اور محتاجوں سے اچھا سلوک کرنا اور لوگوں سے اچھی بات کہنا اور نماز قائم کرنا اور زکوةٰ دینا پھر سوائے چند آدمیوں کے تم میں سے سب منہ موڑ کر پھر گئے

( سورة البقرة , Al-Baqara, Chapter #2, Verse #83)

Is Aiyat main Allah talah farma rahe ha k mah baap or rishtadaro ka saat acha salooq karo .

(5) اے لوگو اپنے رب سے ڈرو جس نے تمہیں ایک جان سے پیدا کیا اور اسی جان سے اس کا جوڑا بنایا اور ان دونوں سے بہت سے مرد اور عورتیں پھیلائیں اس اللہ سے ڈرو جس کا واسطہ دے کر تم ایک دوسرے اپنا حق مانگتے ہو اور رشتہ داری کے تعلقات کو بگاڑنے سے بچو بے شک الله تم پر نگرانی کر رہا ہے

( سورة النساء , An-Nisa, Chapter #4, Verse #1)
Is aiyat main Allah talah farma rahe ha ka rishtadare ka talooqat ko bigarna se bacho
(24) اور رشتہ دار اور مسکین اور مسافر کو اس کا حق دے دو اور مال کو بے جا خرچ نہ کرو

( سورة الإسراء , Al-Isra, Chapter #17, Verse #26)
Is aiyat main Allah talah farma rahe ha rishtadar miskin or mosafir ko haq do

Dua main yaad rakheya ga
Amel soname
Amel_soname@yahoo.com

Rishto main sab se kareeb ka rishta mah k ha

As salamu allaiqum
Insan ki zindage main sab se kareeb ak rishta us ki mah ka ha . ma hake ahse pyare cheez ha jis ka ajj ki nojawan nasal ko ahsas he nahi ha . mah k pao talah jannat ha
Hadees pak main ha

A man once consulted the Prophet Muhammad about taking part in a military campaign. The Prophet asked the man if his mother was still living. When told that she was alive, the Prophet said: "(Then) stay with her, for Paradise is at her feet." (Al-Tirmidhi)
On another occasion, the Prophet said: "God has forbidden for you to be undutiful to your mothers." (Sahih Al-Bukhari)

Dua main yaad rakheya ga
Amel soname
Amel_soname@yahoo.com

Mah baap ki belos khidmat


As salamu allaiqum

Wo log kitna kushnaseeb hote ha jinn ka mah baap ka saya unka saro per hota ha . mera kehna ka matlab yeah ha k bacha ka pedahish ka waquat se jawani tak mah baap ka saya bacha ka sir pe hona . mah baap ki agar khidmat daki jahe to hum log agar apni sare zindage be de de to be apna mah baap ka ahsan nahi otar sakte . jab insan peda hota ha to wo nanga peda hota ha yaha tak ka us ka jisam pe kapre be nahi hote . ishe bacha ka mah baap is ko kapre mohiya karte ha . yaha tak mah apna dood bacha ko pilate ha . is ko apna sath solati ha . is ka dehan rakhte ha . apna bacha ko khilate ha . baap kamata ha mahnat karta ha sirf apna bacha ki achi pervarish ka liya . mah baap khod roti nahi khata laken pehla apna bacha ko khelata ha .yaha tak k khod ki apni khowahish pore nahi karte laken apna bacho ki khowahish pore karte ha . khod porana boseda kapre pehanta ha laken apna bacho ko acha or khoobsoorate kapre pehnata ha . mah baap apna jo be kuch hota ha apna bacho ka liya dao pe laga deta ha . mah baap apna bacho k liya sare sare raat jangta ha . unko alla taleem dilwate ha . unki feature planning karte ha . mah baap apna bacho ko acha se acha khilata ha . sair wa tafree karwate ha . bacha ko deni taleem dilwata ha . uska sath hasta ha . acha se boolte ha . agar bacha odas ho jahe to mah baap be odas hota ha agar bacha ko takleef ho to mah baap ko takleef hote ha . yaha tak k jab bacha jawan ho jata ha to unki achi jaga shahdi karte ha or shahdi k liya be wo apni jama ponji kharch karte ha . u samajh lay k mah baap bacha ki parvarish k liya apni pore zindage laga deta ha . begar kisi fees ka yani begar kisi lalach k or badla main hum unko kya deta ha ………………………? Is ka jaweb app khod apna app se lain

Dua main yaad rakheya ga

Amel soname

Amel_soname@yahoo.com

Mah ki khalis mohbat olad se


As salamu allaiqum
Dunia main jo sab se pak rishta ha insano main wo mah ka ha . ake ake itni pyare cheeze ha jis ko har gezz hargezz nazar andaz nahi kiya ja sakta . agar deakha jahe to tamam bacha apni maho se bohat bohat pyar karte ha . mah apna bacha se bohat bohat pyar karte ha . is pyar ka picha kohi chalaki nahi hote . yeah mah ki khalis mamta hote ha apna bacha ka liya . u samajh lay k agar bacha ko takleef hote ha to mah ko mehsos hote ha . mana apni zindage main ahse ahse maho ko deakha ha jin ka bacha kisi hadsa main ya wesa he foot hogahe or wo mahe bechare un ka ghaam main pagal ho gahe ha . mahe apna bacha ki yaad main roti ha agar unko kuch ho jahe . agar unka bacha ko kohi kuch kehde ya nooksan pouchae to wo phir apna bacha ki hifazat karte ha . akhir q…………………?
Q k wo apna olad se bohat bohat pyar karte ha . is pyar main kabe be kami nahi ate . chahe bacha 1 sal ka ho ya 35 sal ka wo otna he pyar karte ha k jitna wo chati ha . is liya app log be apni maho ka khail rakhe or unka be ahsas kareen har mamla main
Dua main yaad rakheya ga
Amel soname
Amel_soname@yahoo.com

Olad walden k sath ahsan kareen


As salamu allaiqum

Old ko chaheya k wo apna mah baap ka sath acha salook kareen . q k ajkal to nafsa nafsi ka door ha . bus her insan apna faida k liya sochta ha . yaha tak bacha be apna mah baap ka sath selfish ho jata ha . apni chalakiya karte ha or yahe samajhta ha k hamare mah baap to bewakuf ha balah unho na jo hamare liya kiya wo to unka faraz tha . or sab he ka mah baap ahsa karte ha to hamare mah baap ny kon sa ahsa naya kam kardeya . to yeah yaad rakhe k olad apna walden k sath naki or hason salook kareen . yani un ka sath bohat bohat acha bartao kareen . jis bacha ka walden us se naraz to u samajh lay k na to wo den ka or na wo dunia ka

Allah talah quran pak main farmate ha


اور تیرا رب فیصلہ کر چکا ہے اس کے سوا کسی کی عبادت نہ کرو اور ماں باپ کے ساتھ نیکی کرو اور اگر تیرے سامنے ان میں سے ایک یا دونوں بڑھاپے کو پہنچ جائیں تو انہیں اف بھی نہ کہو اور نہ انہیں جھڑکو اور ان سے ادب سے بات کرو

Chapter: 17 , Verse: 23

abb is aiyat main Allah talah saaf saaf farma rahe ha k jab mah baap borapa ki halat main pouch jai to off be na karo or na he inko jarko or in k sath adab se baat karo

(2) اور ہم نے انسان کو اپنے والدین کے ساتھ نیکی کرنے کی تاکید کی کہ اسے اس کی ماں نے تکلیف سے اٹھائے رکھا اور اسے تکلیف سے جنا اوراس کا حمل اور دودھ کا چھڑانا تیس مہینے ہیں یہاں تک کہ جب وہ اپنی جوانی کو پہنچا اور چالیں سال کی عمر کو پہنچا تو اس نے کہا اے میرے رب مجھے توفیق دے کہ میں تیری نعمت کا شکر ادا کروں جو تو نے مجھ پر انعام کی اور میرے والدین پر اور میں نیک عمل کروں جسے تو پسند کرے اور میرے لیے میری اولاد میں اصلاح کر بے شک میں تیری طرف رجوع کرتا ہوں اور بے شک میں فرمانبردار میں ہوں

( سورة الأحقاف , Al-Ahqaf, Chapter #46, Verse #15)

Abb is aiyat main Allah talah farma rahe ha k hum ny insan ko apna walden k sath naki karna ka takid ki ha k is ki mah ny takleef se othae rakha or ishe takleef se peda kiya

Abb yeah Allah ki taraf se hum per hukum ha k hum apna walden k sath naki kareen . unka kehna mana . bus jitna be log ha wo apna walden k sath bohat bohat acha salook kareen q k yeah hamare den islam ka hisa ha . or ahse nemat bar bar nahi milti

Dua main yaad rakheya ga

Amel soname

Amel_soname@yahoo.com

Walden ka olad pe haq


As salamu allaiqum

Olad par walden ki fazl wa ahsan se kisi ko be inkar nahi ho sakta . walden hi hamare wajod me ana ka sabab ha . or is par in ke azeem huqoq hain , inho ne bachpan me hamare parwarish ki .hamain rahat wa ayeshai ke liya hamesha takleefen othai . hamari need ke liya khod apni need qurban ki. Ishe tarah baap bhi tumare rozi roti ke liya humare bachpan se le kar bare hone tak mehnat karta raha , or hamare tabiyat or rahnomahiya karta raha , jbke hum apne nafa nooksan ka shohor nahi rakhte the , is liya Allah talah ne olad ko walden k sath husn salook or shokar gozari ka hukum deya ha

Allah talah quran pak main farmate ha


اور ہم نے انسان کو اس کے ماں باپ کے متعلق تاکید کی ہے اس کی ماں نے ضعف پر ضعف اٹھا کر اسے پیٹ میں رکھا اور دو برس میں اس کا دودھ چھڑانا ہے تو میری اور اپنے ماں باپ کی شکر گزاری کرے میری ہی طرف لوٹ کر آنا ہے

Surah luqman chaptor no 31 verse no 14

Hum par hamare walden ka yeah haq ha ke hum un ke sath hosan salook Karen . qoli or amli tor pe . mali tor pe be unki madad kareen . agar unko kohi cheez chaheya ho to us se mo na more . unka kehna mana . unse narmi ke sath goftago kareen . un k sath bohat he adab se paish ahe . unki shan main ghustaki na kareen , borape ya beemari ya kamzoore ke waqt unse tandil na ho or na he unki janib se bojh mehsos kareen k abb to yeah hum per bojh ban gahe . q k bohat se log ahse sorate main edhi home main apna walden ko dal deta ha or yeah bohat he sharam ki baat ha . baad mein hum bhi unhi ke muqam par honge . jis tarah woh hamare mah baap ha . agar zindage rahi to hum bhi sis taraha apni olad ke samne borape ko pouchay ga . jis taraha ajj who hamare khidmat ke zaroorate mand hai ishe taraha hum bhi apni olad ki khidmat ke zaroorate mand honge ,

Allah talah ka irshad ha

Agar who hamare samne budhape ko pouch jahe in dono me se ek ya who dono , toh un se uff bhi na kehna or unko jhidakna bhi nahi or un se adab ke sath baat cheet karna or kehte rehna ke aye mere parwardigar in par reham farma jaise ke unho ne mujhe bachpan me pala

Dua main yaad rakheya ga

Amel soname

Amel_soname@yahoo.com

Mah baap k liya dua magfirate (esal e sawab)

As salamu allaiqum

Jinn muslim behn bhaio ka mah baap , ya payare is dunia se gozar gahe ho unko chaheya ka . apna payro k liya esal e sawab kareen . matlab dua magfirate kareen .

Allah talah quran pak main irshad farmate ha

10اور ان کے لیے بھی جو مہاجرین کے بعد آئے (اور) دعا مانگا کرتے ہیں کہ اے ہمارے رب ہمیں اور ہمارےان بھائیوں کو بخش دے جو ہم سے پہلے ایمان لائے ہیں اور ہمارے دلوں میں ایمانداروں کی طرف سے کینہ قائم نہ ہونے پائے اے ہمارے رب بے شک تو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے

Surah hashr chaptor no 59 verse no 10

Is aiyat main waza ha or un ka liya be jo mahajireen ka baad ahe or dua manga karte rahe k aye hamare rab hamain or hamare un bhaio ko bakash de jo hum se pehla eman lahe ha

Goya ka pehla k eman walay log to app be eman walay logo ka liya dua magfirate kareen


اَللَّهُمَّ اغْفِرْ لِحَيِّنَا وَمَيِّتِنَا وَشَاهِدِنَا وَغَائِبِنَا وَصَغِيْرِنَا وَكَبِيْرِنَا وَذَكَرِنَا وَأُنْثَانَا. اَللَّهُمَّ مَنْ أَحْيَيْتَهُ مِنَّا فَأَحْيِهِ عَلَى اْلإِسْلاَمِ، وَمَنْ تَوَفَّيْتَهُ مِنَّا فَتَوَفَّهُ عَلَى اْلإِيْمَانِ، اَللَّهُمَّ لاَ تَحْرِمْنَا أَجْرَهُ وَلاَ تُضِلَّنَا بَعْدَه


Allahum maghfir lihayyina, wa mayyitinaa, wa shaahidina, wa ghaa-'ibina, wa sagheerina, wa kabeerina, wa dhakarrina wa untha. Allahumma man ahyaitahu mina fa ahyihi 'alal Islami wa man tawaf-faytahu mina fatawaffahu 'alal imani. Allahumma la tahrima arjahu wa la tudhillana ba'dahu

O Allah! Forgive our living and our dead, those who are with us and those who are absent, our young and our old, our men and our women. O Allah! Whomever you keep alive from us keep him alive on Islam, and whomever you take away from us, take him as a believer. O Allah! Do not leave us bereft of his good and do not send us astray after them.
[Ibn Majah 1:480, Ahmad 2:368]

Dua main yaad rakheya ga

Amel soname

Amel_soname@yahoo.com

mah baap ki nafarmani karna yeah shatani kam ha


As salamu allaiqum

Allah tala ny quran main bar bar takid ki ha ka apna mah baap ka sath acha salook karo . unka sath naki karo . yani unki respect karo or unka adab karo . laken shaitan hamara dushman ha or wo kabe be nahi chahe ga ka insan Allah ka hukum ki takmil kareen or shaitan hamara dushman ha is liya shaitan mah baap ki nafarmani ka hukum deta ha logo ko halaka Allah tala ny quran main waze toor per logo ko bata deya ha mah baap ki atat ka is ki tasdeak quran pak main ha



وَوَصَّيْنَا الْإِنسَانَ بِوَالِدَيْهِ حُسْنًا ۖ وَإِن جَاهَدَاكَ لِتُشْرِكَ بِي مَا لَيْسَ لَكَ بِهِ عِلْمٌ فَلَا تُطِعْهُمَا ۚ إِلَيَّ مَرْجِعُكُمْ فَأُنَبِّئُكُم بِمَا كُنتُمْ تَعْمَلُونَ
اور ہم نے انسان کو اپنے ماں باپ کے ساتھ اچھا سلوک کرنے کا حکم دیا ہے اور اگر وہ تجھے اس بات پر مجبور کریں کہ تو میرے ساتھ اسے شریک بنائے جسے تو جانتا بھی نہیں تو ان کا کہنا نہ مان تم سب نے لوٹ کرمیرے ہاں ہی آنا ہے تب میں تمہیں بتا دوں گا جو کچھ تم کرتے تھے

Chapter: 29 , Verse: 8

وَوَصَّيْنَا الْإِنسَانَ بِوَالِدَيْهِ إِحْسَانًا ۖ حَمَلَتْهُ أُمُّهُ كُرْهًا وَوَضَعَتْهُ كُرْهًا ۖ وَحَمْلُهُ وَفِصَالُهُ ثَلَاثُونَ شَهْرًا ۚ حَتَّىٰ إِذَا بَلَغَ أَشُدَّهُ وَبَلَغَ أَرْبَعِينَ سَنَةً قَالَ رَبِّ أَوْزِعْنِي أَنْ أَشْكُرَ نِعْمَتَكَ الَّتِي أَنْعَمْتَ عَلَيَّ وَعَلَىٰ وَالِدَيَّ وَأَنْ أَعْمَلَ صَالِحًا تَرْضَاهُ وَأَصْلِحْ لِي فِي ذُرِّيَّتِي ۖ إِنِّي تُبْتُ إِلَيْكَ وَإِنِّي مِنَ الْمُسْلِمِينَ

اور ہم نے انسان کو اپنے والدین کے ساتھ نیکی کرنے کی تاکید کی کہ اسے اس کی ماں نے تکلیف سے اٹھائے رکھا اور اسے تکلیف سے جنا اوراس کا حمل اور دودھ کا چھڑانا تیس مہینے ہیں یہاں تک کہ جب وہ اپنی جوانی کو پہنچا اور چالیں سال کی عمر کو پہنچا تو اس نے کہا اے میرے رب مجھے توفیق دے کہ میں تیری نعمت کا شکر ادا کروں جو تو نے مجھ پر انعام کی اور میرے والدین پر اور میں نیک عمل کروں جسے تو پسند کرے اور میرے لیے میری اولاد میں اصلاح کر بے شک میں تیری طرف رجوع کرتا ہوں اور بے شک میں فرمانبردار میں ہوں

Chapter: 46 , Verse: 15

وَوَصَّيْنَا الْإِنسَانَ بِوَالِدَيْهِ حَمَلَتْهُ أُمُّهُ وَهْنًا عَلَىٰ وَهْنٍ وَفِصَالُهُ فِي عَامَيْنِ أَنِ اشْكُرْ لِي وَلِوَالِدَيْكَ إِلَيَّ الْمَصِيرُ
اور ہم نے انسان کو اس کے ماں باپ کے متعلق تاکید کی ہے اس کی ماں نے ضعف پر ضعف اٹھا کر اسے پیٹ میں رکھا اور دو برس میں اس کا دودھ چھڑانا ہے تو میری اور اپنے ماں باپ کی شکر گزاری کرے میری ہی طرف لوٹ کر آنا ہے


Chapter: 31 , Verse: 14

۞ وَاعْبُدُوا اللَّهَ وَلَا تُشْرِكُوا بِهِ شَيْئًا ۖ وَبِالْوَالِدَيْنِ إِحْسَانًا وَبِذِي الْقُرْبَىٰ وَالْيَتَامَىٰ وَالْمَسَاكِينِ وَالْجَارِ ذِي الْقُرْبَىٰ وَالْجَارِ الْجُنُبِ وَالصَّاحِبِ بِالْجَنبِ وَابْنِ السَّبِيلِ وَمَا مَلَكَتْ أَيْمَانُكُمْ ۗ إِنَّ اللَّهَ لَا يُحِبُّ مَن كَانَ مُخْتَالًا فَخُورًا

اور الله کی بندگی کرو اورکسی کو اس کا شریک نہ کرو اور ماں باپ کے ساتھ نیکی کرو اور رشتہ داروں اور یتیموں اور مسکینوں اور قریبی ہمسایہ اور اجنبی ہمسایہ اورپاس بیٹھنے والے او رمسافر او راپنے غلاموں کے ساتھ بھی نیکی کرو بے شک الله اترانے والے بڑائی کرنے والے کو پسند نہیں کرتا

Chapter: 4 , Verse: 36

وَقَضَىٰ رَبُّكَ أَلَّا تَعْبُدُوا إِلَّا إِيَّاهُ وَبِالْوَالِدَيْنِ إِحْسَانًا ۚ إِمَّا يَبْلُغَنَّ عِندَكَ الْكِبَرَ أَحَدُهُمَا أَوْ كِلَاهُمَا فَلَا تَقُل لَّهُمَا أُفٍّ وَلَا تَنْهَرْهُمَا وَقُل لَّهُمَا قَوْلًا كَرِيمًا

اور تیرا رب فیصلہ کر چکا ہے اس کے سوا کسی کی عبادت نہ کرو اور ماں باپ کے ساتھ نیکی کرو اور اگر تیرے سامنے ان میں سے ایک یا دونوں بڑھاپے کو پہنچ جائیں تو انہیں اف بھی نہ کہو اور نہ انہیں جھڑکو اور ان سے ادب سے بات کرو

Chapter: 17 , Verse: 23

وَإِذْ أَخَذْنَا مِيثَاقَ بَنِي إِسْرَائِيلَ لَا تَعْبُدُونَ إِلَّا اللَّهَ وَبِالْوَالِدَيْنِ إِحْسَانًا وَذِي الْقُرْبَىٰ وَالْيَتَامَىٰ وَالْمَسَاكِينِ وَقُولُوا لِلنَّاسِ حُسْنًا وَأَقِيمُوا الصَّلَاةَ وَآتُوا الزَّكَاةَ ثُمَّ تَوَلَّيْتُمْ إِلَّا قَلِيلًا مِّنكُمْ وَأَنتُم مُّعْرِضُونَ

اور جب ہم نے بنی اسرائیل سے عہد لیا کہ الله کے سوا کسی کی عبادت نہ کرنا اور ماں باپ اور رشتہ داروں اور یتیموں اور محتاجوں سے اچھا سلوک کرنا اور لوگوں سے اچھی بات کہنا اور نماز قائم کرنا اور زکوةٰ دینا پھر سوائے چند آدمیوں کے تم میں سے سب منہ موڑ کر پھر گئے
Chapter: 2 , Verse: 83

قُلْ تَعَالَوْا أَتْلُ مَا حَرَّمَ رَبُّكُمْ عَلَيْكُمْ ۖ أَلَّا تُشْرِكُوا بِهِ شَيْئًا ۖ وَبِالْوَالِدَيْنِ إِحْسَانًا ۖ وَلَا تَقْتُلُوا أَوْلَادَكُم مِّنْ إِمْلَاقٍ ۖ نَّحْنُ نَرْزُقُكُمْ وَإِيَّاهُمْ ۖ وَلَا تَقْرَبُوا الْفَوَاحِشَ مَا ظَهَرَ مِنْهَا وَمَا بَطَنَ ۖ وَلَا تَقْتُلُوا النَّفْسَ الَّتِي حَرَّمَ اللَّهُ إِلَّا بِالْحَقِّ ۚ ذَ‌ٰلِكُمْ وَصَّاكُم بِهِ لَعَلَّكُمْ تَعْقِلُونَ

کہہ دو آؤ میں تمہیں سنا دوں جو تمہارے رب نے تم پر حرام کیا ہے یہ کہ اس کے ساتھ کسی کو شریک نہ بناؤ اور ماں باپ کے ساتھ نیکی کرو اور تنگدستی کے سبب اپنی اولاد کو قتل نہ کرو ہم تمہیں اور انہیں رزق دیں گے اور بے حیائی کے ظاہر اور پوشیدہ کاموں کے قریب نہ جاؤ اور نا حق کسی جان کو قتل نہ کرو جس کا قتل الله نے حرام کیا ہے تمہیں یہ حکم دیتا ہے تاکہ تم سمجھ جاؤ

Chapter: 6 , Verse: 151


shaitan Allah ka or adam ki olad ka dushman ha wo kabe be nahi chahe ga ka insan Allah k hukum ki takmil kareen or apna maah baap ki atat kareen

yeah videos zaroor deakha yeah is topic se related ha




dua main yaad rakheya ga

amel soname

amel_soname@yahoo.com

Olad ki walden ka sath larahe jagra


As salamu allaiqum
Aksar okat app logo ny deakha hoga ya suna hoga k fala ki olad ny fala ko bora kaha ya mara . ya phir khoob larahe howi . ya kisi ki olad ny apna walden k sath batimizi ki . ahse position kuch cheeze jo mera samna ahe ha wo khul kar bayan karta ho takrebon 90% ahsa cases hota ha jinn main jadugar ka hath hota ha yani wo bacha ko us ka mah baap se larahe ka amal kardeta ha ya phir shaitan ko mosalat kardeta ha . is main olad ka kohi kasoor nahi hota k wo apna mah baap ko bora kahe bus sara kam shaitan kar raha hota ha jo jadugar ny beja hota ha . yaha tak k jab jadugar shaitan ka zarya miya bewi main larahe karvadeta ha .or baat talaq tak pouch jate ha . or bohat say logo ko to talaq be ho chuki ha sirf ishe kala jadu , or shaitan jinn ki waja se shaitan ka sab se passandeda kam jo ha miya bewi ko joda karna ha shaitan ko is kam se intahahe sakone or itmanan milta ha q k shaitan insan ko kabe be sakone main nahi deak na chata is ki tasdeak quran pak ki surah main ha


وَاتَّبَعُوا مَا تَتْلُو الشَّيَاطِينُ عَلَىٰ مُلْكِ سُلَيْمَانَ ۖ وَمَا كَفَرَ سُلَيْمَانُ وَلَـٰكِنَّ الشَّيَاطِينَ كَفَرُوا يُعَلِّمُونَ النَّاسَ السِّحْرَ وَمَا أُنزِلَ عَلَى الْمَلَكَيْنِ بِبَابِلَ هَارُوتَ وَمَارُوتَ ۚ وَمَا يُعَلِّمَانِ مِنْ أَحَدٍ حَتَّىٰ يَقُولَا إِنَّمَا نَحْنُ فِتْنَةٌ فَلَا تَكْفُرْ ۖ فَيَتَعَلَّمُونَ مِنْهُمَا مَا يُفَرِّقُونَ بِهِ بَيْنَ الْمَرْءِ وَزَوْجِهِ ۚ وَمَا هُم بِضَارِّينَ بِهِ مِنْ أَحَدٍ إِلَّا بِإِذْنِ اللَّهِ ۚ وَيَتَعَلَّمُونَ مَا يَضُرُّهُمْ وَلَا يَنفَعُهُمْ ۚ وَلَقَدْ عَلِمُوا لَمَنِ اشْتَرَاهُ مَا لَهُ فِي الْآخِرَةِ مِنْ خَلَاقٍ ۚ وَلَبِئْسَ مَا شَرَوْا بِهِ أَنفُسَهُمْ ۚ لَوْ كَانُوا يَعْلَمُونَ ﴿١٠٢﴾
اور انہوں نے اس چیز کی پیروی کی جو شیطان سلیمان کی بادشاہت کے وقت پڑھتے تھے اور سلیمان نے کفر نہیں کیا تھا لیکن شیطانوں نے ہی کفر کیا لوگوں کو جادو سکھاتے تھے اور اس کی بھی جو شہر بابل میں ہاروت و ماروت دوفرشتوں پر اتارا گیا تھا اور وہ کسی کو نہ سکھاتے تھے جب تک یہ نہ کہہ دیتے ہم تو صرف آزمائش کے لیے ہیں تو کافر نہ بن پس ان سے وہ بات سیکھتے تھے جس سے خاوند اور بیوی میں جدائی ڈالیں حالانکہ وہ اس سے کسی کو الله کے حکم کے سوا کچھ بھی نقصان نہیں پہنچا سکتے تھے اور سیکھتے تھے وہ و ان کو نقصان دیتی تھی اورنہ نفع اور وہ یہ بھی جانتے تھے کہ جس نے جادو کو خریدا اس کے لیے آخرت میں کچھ حصہ نہیں اور وہ چیز بہت بری ہے جس کے بدلہ میں انہوں نے اپنے آپ کو بیچا کاش وہ جانتے
Al-Baqara, Chapter #2, Verse #102)


shaitan behan bhaio or logo main jagra dalta ha taka fitna fasad ho ro logo ake dosare ka dushman ho jahe or apious main larte marte rahe is ki tasdeak quran pak main ha


وَرَفَعَ أَبَوَيْهِ عَلَى الْعَرْشِ وَخَرُّوا لَهُ سُجَّدًا ۖ وَقَالَ يَا أَبَتِ هَٰذَا تَأْوِيلُ رُؤْيَايَ مِنْ قَبْلُ قَدْ جَعَلَهَا رَبِّي حَقًّا ۖ وَقَدْ أَحْسَنَ بِي إِذْ أَخْرَجَنِي مِنَ السِّجْنِ وَجَاءَ بِكُمْ مِنَ الْبَدْوِ مِنْ بَعْدِ أَنْ نَزَغَ الشَّيْطَانُ بَيْنِي وَبَيْنَ إِخْوَتِي ۚ إِنَّ رَبِّي لَطِيفٌ لِمَا يَشَاءُ ۚ إِنَّهُ هُوَ الْعَلِيمُ الْحَكِيمُ
اور اپنے ماں باپ کو تخت پر اونچا بٹھایا اور اس کے آگے سب سجدہ میں گر پڑے اور کہا اےباپ میرے اس پہلے خواب کی یہ تعبیر ہے اسے میرے رب نے سچ کر دکھایا اوراس نے مجھ پر احسان کیا جب مجھے قید خانے سے نکالا اور تمہیں گاؤں سے لے آیا اس کے بعد کہ شیطان مجھ میں اورمیرے بھائیوں میں جھگڑا ڈال چکا بے شک میرا رب جس کے لیے چاہتا ہے مہربانی فرماتا ہے بے شک وہی جاننے والا حکمت والا ہے
Yusuf, Chapter #12, Verse #100)


وَقُل لِّعِبَادِي يَقُولُواْ الَّتِي هِيَ أَحْسَنُ إِنَّ الشَّيْطَانَ يَنزَغُ بَيْنَهُمْ إِنَّ الشَّيْطَانَ كَانَ لِلإِنْسَانِ عَدُوًّا مُّبِينًا
اور میرے بندوں سے کہہ دو کہ وہی بات کہیں جو بہتر ہو بےشک شیطان آپس میں لڑا دیتا ہے بے شک شیطان انسان کا کھلا دشمن ہے
Al-Isra, Chapter #17, Verse #53)


is topic se related yeah video ha is ko zaroor deakha taka app jana shaitan ki chaleen



dua main yaad rakheya ga

amel soname

amel_soname@yahoo.com